صفحہ اول / شہر شہر / دارلامان میں مقیم خواتین کو ہرممکن سہولیات فراہم کی جائیں،قمر سلطان

دارلامان میں مقیم خواتین کو ہرممکن سہولیات فراہم کی جائیں،قمر سلطان

جھنگ . چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ لاہور کے احکامات کی روشنی میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج جھنگ قمر سلطان نے دارالامان کا دورہ کیا اس موقع پر ڈپٹی ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر اظہر عباس عادل اور انچارج دارالامان مسز ثمرہ رباب بھی ان کے ہمراہ تھیں۔

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج قمر سلطان نے دارالامان میں بے سہارا مقیم خواتین کی تعلیم وتربیت،رہائشی سہولیات،طبی سہولیات و میڈیسن ،غذا،نگہداشت ، صفائی ستھرائی اورسیکورٹی انتظامات و دیگر سہولیات کے علاوہ کرونا وائرس سے بچاﺅکےلئے کئے گئے حفاظتی اقدامات کا بھی تفصیلی جائزہ لیااور مقیم خواتین سے فرداً فرداً مسائل دریافت کئے۔

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج قمر سلطان نے ادارہ میں آنے والی بے سہاراخواتین اور بچیوں کا اندراج ریکارڈ بھی چیک کیا اور کہا کہ مقیم خواتین کی کونسلنگ کے ذریعے ان کے معاملات کو ان کے خاندان میں صلح کے ذریعے حل کروانے کی ہر ممکن کوشش کی جائے، جو معاملات عدالت کے ذریعے حل ہونے ہیں ان کے کیس فوری عدالت میں بھیجوائیں تاکہ میں اور میری ٹیم ان کو جلد از جلد نمٹائے گی تاکہ یہ خواتین اپنے اپنے گھروں میں پہلے کی طرح زندگی بسر کر سکیں کے۔

انہوں نے دارالامان میں اعلیٰ نظم و نسق برقرار رکھنے کی بھی ہدایات جاری کیں اور کہا کہ دارلامان میں مقیم خواتین کو ہرممکن سہولیات فراہم کی جائیں اور انکے مسائل کو فوری حل کیا جائے۔

انچارج دارالامان مسز ثمرہ رباب نے سیکورٹی کے مسائل کو کم کرنے کیلئے صنعت زار اور دارالامان کے درمیان علیحدہ سپرٹ دیوار بنوانےاور گیٹ لگانے کا بھی مطالبہ کیا جس پر ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج قمر سلطان نے کہا کہ اس کا کیس پراپر محکمہ بلڈنگ کو بھیجوانے کا کہا تاکہ اس پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جاسکے۔اس موقع پر ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج قمر سلطان نے کہا کہ جھنگ کا دارالامان دوسرے اضلاع کی نسبت بہتر طریقے سے ورکنگ کر رہا ہے۔

٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: قلب نیوز ڈاٹ کام ۔۔۔۔۔ کا کسی بھی خبر اورآراء سے متفق ہونا ضروری نہیں. اگر آپ بھی قلب نیوز ڈاٹ کام پر اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر شائع کر نا چاہتے ہیں تو ہمارے آفیشیل ای میل qualbnews@gmail.com پر براہ راست ای میل کر سکتے ہیں۔ انتظامیہ قلب نیوز ڈاٹ کام

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے