صفحہ اول / پاکستان / ہرنائی،قیامت خیز زلزلے کے بعدآفٹر شاکس سے خوف وحراس پھیل گیا

ہرنائی،قیامت خیز زلزلے کے بعدآفٹر شاکس سے خوف وحراس پھیل گیا

ہرنائی . ضلع ہرنائی میں گزشتہ شب آنیوالے قیامت خیز زلزلے کے بعد ریسکیو آپریشن مکمل کر لیا گیا، جبکہ علاقے میں امدادی سرگرمیاں جاری ہیں،آفٹر شاکس جاری ، ہزاروں افراد کھلے آسمان تلے امداد کے منتظر ہیں،پاک فوج، ایف سی، پی ڈی ایم اے اور دیگر ادارے امدادی سرگرمیوں میں مصروف، ایک زخمی دم توڑگیا، لوگوں کا امداد نہ ملنے کا شکوہ،،نقصانات کا اندازہ لگانے کیلئے سروے کا عمل بھی شروع کر دیا گیا ہے.

جمعہ کو 3 مرتبہ آفٹر شاکس محسوس کیے گئے جس کے باعث لوگوں میں خوف برقرار ہے،د وسری جانب سیکڑوں مکانات منہدم ہونے کے باعث دوسری رات بھی ہزاروں متاثرین نے رات کھلے آسمان تلے گزاری، جمعہ کو ایک اور زخمی دم توڑ گیا، ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال ہرنائی کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹرمنظور ترین کے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ گذشتہ دو دنوں کے دوران 219 افراد کی علاج معالجہ کرکے ڈی ایچ کیو ہسپتال ہرنائی سے فارغ کردیاگیا ہے جبکہ 33 شدید زخمیوں کے پاک آرمی، ایف سی اور پی ڈی ایم اے، ایدھی کے نوجوانوں کے ذریعے کوئٹہ منتقل کیا گیا ہے اس کے علاوہ اس آپریشن میں پاک آرمی نے ائر ایمبولینس کے ذریعے بھی شدید زخمیوں کو کوئٹہ منتقل کیا گیاہے.

ایم ایس کے مطابق اس وقت سول ہسپتال کوئٹہ میں داخل مریضو ں کی تعداد 19 ہے جبکہ سی ایم ایچ کوئٹہ میں 13زخمی داخل ہیں اس طرح آج صبح ایک 70سالہ شخص شہباز خان زخموں کی تاب نہ لاتے ہوے چل بسا دوسری جانب ہرنائی میں ریسکیو آپریشن مکمل ہوچکا ہے پی ڈی ایم اے کے مطابق جمعہ کو ریلیف آپریشن شروع کردیاگیا جس کے تحت زلزلے سے متاثرہ افراد میں خوراک، خیمے اور کمبل وغیرہ تقسیم کیے جارہے ہیں.

پی ڈی ایم اے کے مطابق ہرنائی شہر میں 100 سے زیادہ مکانات مکمل طور پر تباہ ہوچکے ہیں اس کے علاوہ درجنوں ایسے مکانات ہیں جو رہائش کے قابل نہیں رہے ریلیف آپریشن کے بعد زلزلے سے ہونے والے مالی نقصانات کا جائزہ لینے کے لیے علاقے میں سروے کا آغاز کردیاگیا حکومت کی یہ کوشش ہے کہ جلد سے جلد زلزلہ سے متاثرہ خاندانوں کی مدد کی جاسکے دوسری جانب سینکڑوں افرادنے دوسری رات بھی زلزلہ سے خوف زدہ ہوکر اور مکانات گرنے کے باعث کھلے آسمان تلے گزاری ہے.

انہوں نے کہا ہے کہ اب تک انکے ساتھ حکومت کی جانب سے کوئی امداد نہیں ہوا اور نہ ہی داد رسی کے لیے کوئی انکے پاس آے ہیں زلزلے کے بعد دوسرے دن بھی آفٹر شاکس کا سلسلہ بھی جاری رہا جس کی وجہ سے ضلع ہرنائی میں شدید خوف وہراس پایا جاتا ہے۔

٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ: قلب نیوز ڈاٹ کام ۔۔۔۔۔ کا کسی بھی خبر اورآراء سے متفق ہونا ضروری نہیں. اگر آپ بھی قلب نیوز ڈاٹ کام پر اپنا کالم، بلاگ، مضمون یا کوئی خبر شائع کر نا چاہتے ہیں تو ہمارے آفیشیل ای میل qualbnews@gmail.com پر براہ راست ای میل کر سکتے ہیں۔ انتظامیہ قلب نیوز ڈاٹ کام

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے